کوہاْٹ کا رہائشی طالب علم صفی اللہ ہلاک

پشاور: 13 جون: پشاور خیبر سپر مارکیٹ بم دھماکہ میں شہید ہونے والے کوہاٹ کے رہائشی طالب علم صفی اللہ کو آبائی علاقہ میں سپرد خاک کر دیا گیا ہے۔ شہید صفی اللہ آٹھ بہن بھائیوں میں سب سے چھوٹا اور والدین کا لاڈلہ بیٹا تھا۔ شہید کی د ماہ قبل شادی ہوئی تھی اور یونیورسٹی آف پشاور کے بی سی ایس کا طالب علم تھا ۔ نماز جنازہ کوہاٹ کے علاقہ نصرت خیل کے قومی مقبرہ میں ادا کر دی گئی۔ شدت غم سے نڈھال والدین اور نئی نویلی دلہن پر غشی کے دورے پڑتے رہے۔ 21 سالہ صفی اللہ کے افسر بننے کا خواب دل میں ادھورا رہ گیا۔ شہید صفی اللہ کی رسم قل بروز منگل اس کے آبائی گاوں نصرت خیل میں ادا کی جائے گی۔ تابع اللہ ولد عنایت اللہ سکنہ داروڑہ پشاور میں ایک پرائیویٹ کمپنی میں سافٹ ویئر انجینئر تھا۔ اس کی میت آبائی گاوں چانگل داروڑہ میں سپرد خاک کر دی گئی۔ اس کا دوسرا بھائی عبید اللہ سیکنڈ ایئر کا طالب علم تھا جو دھماکہ میں زخمی ہو گیا۔ اس کی حالت خطرے سے باہر ہے۔ پشاور بم دھماکے میں رستم کے علاقے تاشقند میں 22 سالہ طالب علم بھی زندگی سے منہ موڑ گیا۔ پرائیویٹ کالج کے ڈی اے ٹی کا طالب علم نصر اللہ ولد غفور گل پہلے دھماکہ کی آواز سن کر ساتھیوں سمیت جائے وقوعہ پر پہنچا۔ اس دوران دوسرا دھماکہ ہوا جس کا شکار ہو کر وہ موت کی آغوش میں چلا گیا ۔نصر اللہ کو آبائی گاوں تاشقند میں سپرد خاک کر دیا گیا۔ خیبر سپر مارکیٹ پشاور بم دھماکوں میں قائداعظم ماڈل سکول صوابی کے جماعت دہم کا طالب علم شہاب انور ولد خورشید انور منیجر حبیب بنک بٹ خیلہ ساکن شاہ نور پل تخت بھائی بھی شہید ہو گیا۔ شہید کا بڑا بھائی بلال انور ایڈورڈز کالج پشاور میں انجینئرنگ کا طالب علم ہے۔ دھماکے میں شدید زخمی ہوا۔ شہاب انور سکول میں موسم گرما کی تعطیلات ہونے کی وجہ سے اپنے بڑے بھائی بلال انور کے پاس ٹیوشن پڑھنے کے لئے ہفتے کے روز پشاور گیا۔ شہاب انوراپنے تین بھائیوں اور دو بہنوں میں سب سے چھوٹا تھا۔ بلال انور نے زخمی ہونے کے بعد اپنے گھر فون کر کے اطلاع دی جس پر لواحقین نے شہید کی لاش گھر پہنچا دی۔ دھماکے میں مردان کے نواحی علاقے گڑھی کپورہ کا طالب علم شاہ زیب بھی جاں بحق ہوا۔ شاہ زیب پرسٹن یونیورسٹی پشاور میں ایم بی اے فائنل ایئر کا طالب علم تھا اور خیبر سپر مارکیٹ میں واقع ایک پرائیویٹ ہاسٹل میں مقیم تھا۔ گزتہ رات جب پہلا دھماکہ ہوا تو وہ دوسرے لوگوں کے ساتھ امدادی کاموں میں مصروف ہو گیا کہ اسی اثناء میں دوسرا دھماکہ ہوا جس کی زد میں آ کر وہ زندگی سے ہاتھ دھو بیٹھا۔ مرحوم سابق ڈی ایس پی شاد علی خان کے نواسے یو اے ای کے شپنگ ڈائریکٹر عالمزیب خان کے صاحب زادے راحت علی خان وصال خان کے بھتیجے اور عبدالصمد خان کے بھانجے تھے۔ شاہ زیب کو اتوار کی شام گڑھی اسماعیل خان زئی میں سپرد خاک کر دیا گیا۔

شکریہ مشرق اہم خبریں

More News

Title Post date
Primary teachers form body to fight for... 11 hours 10 min
Moot on computational, social sciences 11 hours 49 min
Int’l moot on Computational, Social... 11 hours 51 min
Swabi Medical College Principal Named 11 hours 53 min
NBF Forms Book Review Committee 12 hours 2 min
52.76 pass Federal Board HSSC-I exam 2 days 10 hours
PFUJ to make human chain to protect... 2 days 10 hours
Entrance test in KP for medical, dental... 2 days 10 hours
Rain, winds flatten wall of Lakki girls... 3 days 11 hours
ETEA holds Entrance Test for Admission... 3 days 11 hours
Abbottabad Schools Fleecing students in... 3 days 11 hours
School holidays in capital extended till... 3 days 11 hours
PIMS strengthens ambulance service 3 days 12 hours
HSSC-I Exam Results Today 3 days 12 hours
School Holidays Extended Till 25th 3 days 12 hours
Independence Day celebrated at H-8... 4 days 11 hours
Educational institutions celebrate... 5 days 12 hours
Islamia College University holds... 5 days 12 hours
RMS students excel in Cambridge... 5 days 12 hours
Students of IMCG (PG) celebrate... 5 days 12 hours
Tamgha-e-Imtiaz Conferred on IIU... 5 days 12 hours
AIOU announces results of bachelor’s... 5 days 12 hours
IMSciences Independence Day Celebrated 5 days 12 hours
RS 13m scam at University of Peshawar... 5 days 12 hours
Hazara varsity, Japanese centre to... 1 week 3 days
Literary Notes: HEC and Dilemma of Urdu... 1 week 3 days
This week 50 years ago: Students’ letter... 1 week 3 days
UET holds entrance test in KP 1 week 3 days
Farigh Bukhari, Raza Hamdani Remembered... 1 week 3 days
Sarhad University VC Clarifies Report 1 week 3 days